آج کی بات

جرم پر ایک اور جرم

آج کی بات ‏‎:‎ ملک بھر میں قابض استعماری قوتوں اور ان کے حواریوں کی وحشت و بربریت کا سلسلہ بدستورجاری ہے ، ایک جرم ابھی تک اختتام تک ‏نہیں پہنچا کہ دوسرے جرم کا ارتکاب کیا، مظلوم لوگوں نے اپنے شہید بچوں کو ابھی تک دفن نہیں کیا کہ دوسرے جنازے آگئے ، ‏یتیموں، بیواؤں اور آفسردہ والدین کی ...

مزید پڑھیں »

سنگین کا المیہ؛ کابل حکومت خاموش

آج کی بات:‏ قابض استعماری قوتوں نے ایک بار پھر ہلمند کے ضلع سنگین میں عام شہریوں پر بمباری کر کے درجنوں افراد کو خون میں نہلا دیا ہے۔ وہ ‏اس بار بھی حسب سابق یہ دعوی کر رہے ہیں کہ اس میں عام شہری نہیں بلکہ مجاہدین کو نشانہ بنایا گیا ہے۔ کابل حکومت نے بھی دعوی کیا ‏ہے ...

مزید پڑھیں »

امارت اسلامیہ کی فلاحی خدمات

آج کی بات‎:‎ امارت اسلامیہ کے سربکف مجاہدین عالمی طاغوتی قوتوں اور ان کے حواریوں کے خلاف برسر پیکار ہیں۔ وہ افغانستان کی آزادی اور ‏اسلامی نظام کے نفاذ کے لیے حائل رکاوٹوں کو دور کرنے میں مصروف عمل ہیں۔ وہ کامیابی کے ساتھ اپنی منزل کی جانب تیزی سے ‏گامزن ہیں۔ جن علاقوں پر امارت اسلامیہ کا کنٹرول ہے، ...

مزید پڑھیں »

قانون مجرم کو کچھ نہیں کہتا!

آج کی بات:   گزشتہ سال 3 نومبر کو امریکی فوجیوں نے کٹھ پتلی انتظامیہ کے ساتھ مل کر قندوز کے قریب ’بز قندھاری‘ کے مقام پر فوجی آپریشن کیا تھا، جس کا جواز یہ بنایا گیا تھا کہ وہاں تین مجاہدین کمانڈر اپنے چند جنگجوؤں کے ساتھ روپوش ہیں۔ امریکا نے وہاں شدید وحشیانہ بمباری کر کے 50 سے ...

مزید پڑھیں »

آپریشن شفق دوئم، غبار ہفت؛ انسانی المیہ قریب ہے

آج کی بات: کابل حکومت نے آپریشن شفق دوئم کے نام سے سیکڑوں خاندانوں کو بھاری جانی نقصان پہنچایا ہے۔ آپریشن کی آڑ میں عام شہریوں کو گرفتار کیا جاتا ہے۔ بے جا تشدد کا نشانہ بنا کر شہید کیا جنا معمول کی بات ہے۔ اسی طرح اس آپریشن کی وجہ سے سیکڑوں خاندانوں کو بھاری مالی نقصان بھی پہنچا ...

مزید پڑھیں »

تین سو فوجی کس مرض کی دوا  ہیں؟

⁠⁠⁠⁠آج کی بات:   کابل کی زوال پذیر انتظامیہ کا کہنا ہے کہ آقا (امریکا) نے اس کی ’نجات‘ کے لیے افغانستان میں مزید 300 فوجی بھیجنے کا فیصلہ کیا ہے، جو صوبہ ہلمند میں تعینات کیے جائیں گے۔ جس دن امریکی صدر اوباما نے اپنی زبان سے بڑی صراحت کے ساتھ افغانستان میں اپنی شکست کا اعتراف کیا تھا ...

مزید پڑھیں »

اکتالیس اضلاع پر مجاہدین کا کنٹرول ہے

 آج کی بات:   امارت اسلامیہ کے مجاہدین نے سال 2016 میں افغانستان کے مختلف حصوں میں وسیع علاقے دشمن کے کنٹرول سے نکال لیے ہیں۔ کابل حکومت غیرملکی حملہ آوروں کے فضائی اور زمینی فوجی تعاون کے باوجود امارت اسلامیہ کے مجاہدین کی پیش رفت نہیں روک سکی۔ قندوز شہر دوبارہ فتح کیا گیا ہے۔ ہلمند کے دارالحکومت لشکرگاہ ...

مزید پڑھیں »

افغان جنگ میں غیرملکیوں کی نئی فتح!

آج کی بات:   افغان ذرائع ابلاغ نے گزشتہ روز مغربی میڈیا کے حوالے سے ایک رپورٹ شایع کی، جس میں کہا گیا تھا کہ ’افغان جنگ میں شرکت کرنے والے ایک کینیڈین فوجی اہل کار نےواپسی پر  اپنے گھر کے پانچ افراد کو فائرنگ کر کے ہلاک کر دیا اور پھر خود بھی خود کشی کرلی ۔‘ کینیڈین میڈیا ...

مزید پڑھیں »

امریکی جرنیلوں کا اعتراف شکست

آج کی بات: حقیقت یہ ہے کہ امریکی حکام نے کبھی یہ نہیں سوچا تھا کہ ایک ایسا وقت بھی آئے گا، جب جنگی کمانڈر، فوجی افسران اور عام فوجی اپنے ہی جرنیلوں اور حکام پر لعنت بھیجیں گے۔ انہیں ملامت کریں گے۔ سوویت یونین کے کمانڈر بھی اس وقت رو رہے تھے، جب وہ افغانستان میں اپنے فوجیوں کی ...

مزید پڑھیں »

دوہزار سولہ؛ شکست خوردہ قابض و افغان فوج

آج کی بات: سال 2016 کے ابتدائی 3 ماہ "عزم” اور  9 مہینے "عمری” آپریشن جاری رہا ہے۔ امارت اسلامیہ کے سرفروش سپاہیوں اور جانثار مجاہدین نے افغانستان بھر میں قابض قوتوں اور ان کے کٹھ پتلی ایجنٹوں کی درندگی کو لگام دے رکھی تھی۔ جس سے مجاہدین کو عظیم فتوحات ملی ہیں۔ مجاہدین نے نہ صرف اپنے ٹھکانوں اور ...

مزید پڑھیں »