کالم وتجزیہ

پروپیگنڈا؛ دشمن کی کمزوری اور بوکھلاہٹ ہے

آج کی بات: بہادر مجاہدین کے حالیہ حملوں نے جارحیت پسندوں اور ان کی کٹھ پتلیوں کو بوکھلاہٹ سے دوچار کر رکھا ہے۔ دشمن اپنی ناکامیوں اور نقصانات کو چھپانے کے لیے مختلف ہتھکنڈے استعمال کر رہا ہے۔وہ اپنی  بوکھلاہٹ چھپانے کی کوشش میں ہے۔ لیکن ایوان صدر سے لے کر حکومت نواز میڈیا تک سب اس کوشش میں ناکام ...

مزید پڑھیں »

دشمن کی ہلاکتوں کی ایک جھلک

آج کی بات: حال ہی میں افغانستان کے مختلف علاقوں میں جارحیت پسندوں اور کٹھ پتلی فوجیوں کے فضائی حملوں اور وحشیانہ چھاپوں نے زور پکڑا ہے، جس کے باعث شہریوں کو بھاری جانی اور مالی نقصان کا سامنا ہے۔ امارت اسلامیہ کے مجاہدین دشمن کی جارحیت اور سربریت کے خلاف اپنے اصولی مؤقف پر ڈٹے ہوئے ہیں۔ وہ اسلامی ...

مزید پڑھیں »

ماہنامہ شریعت کا نیا شمارہ منظر عام پر

شمارہ نمبر 68 جہاں ایک طرف حق و باطل کا معرکہ بم بارود کے زور پر محاذوں پر لڑا جا رہا ہے، وہیں نظریاتی جنگ کے لیے اپنا کردار ادا کرنے کے ‏لیے امارت اسلامیہ کا اکتوبر کا ‏سرکاری میگزین ’’ماہنامہ شریعت‘‘ اپنی تمام تر رونقوں اور رعنائیوں کے ساتھ صحافتی اُفق پر جلوہ گر ہو چکا ‏ہے، جس میں ...

مزید پڑھیں »

افغانستان کی آزادی و خودمختاری میں علماء کا کردار

محمد حسين مستعدمرحوم سابق رئیس علمیہ اکادمی افغانستان افغانستان کے غیور عوام نے ہر وقت ہر مرحلے میں اپنی آزادی کے لیے قربانی دی اور ہر بار اپنی جہادی کارروائیوں کے ذریعے یہاں جارحیت کرنے والوں کو بھاگنے پر مجبور کیا۔ جہاد اسلام میں بہت بڑی عبادت ہے۔ ہر وقت علماء نے عبادات میں ہماری رہنمائی کی ہے۔ جہاد اور ...

مزید پڑھیں »

اپنی نیت کی نگہبانی کریں!

محمد فرہاد جانباز جو شخص کسی بھی دنیاوی غرض کے لیے جہاد کے میدان میں داخل ہوتا ہے، اگر خدانخواستہ وہ دشمن کے ہاتھوں قید ہو جاتا ہے تو اُسے اپنے مقصد کی ناکامی پر بہت ذلت اٹھانا پڑتی ہے۔ البتہ جس شخص کے جہاد کا مقصد اللہ تعالی کے دین کی نصرت ہو اور لوگوں  کی ہدایت ہو، ایسا ...

مزید پڑھیں »

امریکا کے ساتھ سکیورٹی معاہدے کی منسوخی دیرینہ مطالبہ ہے

آج کی بات: آخرکار اس پارلیمنٹ سے بھی امریکا کے ساتھ کیے گئے سکیورٹی معاہدے کی منسوخی کی آواز بلند کر دی ہے، جس نے تین سال قبل ’سکیورٹی معاہدے‘ کے نام پر افغانستان امریکا کے حوالے کر دیا تھا۔ گزشتہ روز کابل حکومت کی پارلیمنٹ کا اجلاس ہوا، جس میں افغانستان بھر میں حالیہ خون ریز واقعات پر غوروفکر ...

مزید پڑھیں »

کٹھ پتلی حکومت کے جرائم، اپنے لوگوں کی زبانی

موسی فرہاد بگرام جیل سے متعلق کہا جاتا تھا کہ اس کو افغان حکام کے حوالے کیا گیا ہے۔ اسی حوالگی کے ساتھ بہت سے قیدی رہا کر دیے گئے تھے۔ تاہم اشرف غنی کے اقتدار کے بعد یہ جیل دوبارہ قیدیوں سے آباد کر دیا گیا ہے۔ بگرام جیل میں قیدیوں کی صورت حال قریب سے دیکھنے کے لیے ...

مزید پڑھیں »

کیا عوامی قتل عام سے امن قائم ہوگا؟

آج کی بات:   ننگرہار کے ضلع پچیرآگام میں امریکی اور افغان فوجیوں نے مشترکہ کارروائی کے دوران دو خاندانوں کے 9 افراد کو شہید کر دیا ہے۔ سوشل میڈیا کے ورکرز نے مقامی باشندوں کے حوالے سے کہا ہے کہ ’گزشتہ رات امریکی اور افغان فورسز نے پچیرآگام کے علاقے ’پاس صبر‘ میں دو گھروں پر چھاپہ مارا کر ...

مزید پڑھیں »

پکتیا حملہ؛751بموں کا بدلہ ہے

آج کی بات:   پینٹاگون کے مطابق ماہ ’ستمبر‘ کے دوران امریکا نے کابل حکومت کی حمایت پر افغانستان میں 751 بم میں گرائے، جن سے خواتین اور بچوں سمیت سیکڑوں شہری شہید اور زخمی ہوئے ہیں۔ ان کے گھر تباہ اور کافی مالی نقصانات بھی سامنے آئے ہیں۔ مجاہدین نے بار بار کہا ہے کہ امریکا اور اس کے ...

مزید پڑھیں »

ٹرمپ کی حکمت عملی اشرف غنی کی موت ہے

آج کی بات:   ٹرمپ کی نئی حکمت عملی کے اعلان کے بعد کابل انتظامیہ کے سربراہ اشرف غنی کی خوشی پاگل پن کی حد تک پہنچ گئی ہے۔ وہ کئی بار ٹرمپ کا شکریہ ادا کر چکے ہیں۔ انہوں نے بہت زور دار انداز میں اس پالیسی کا خیرمقدم کیا ہے۔ وہ مطالبہ کر رہے ہیں کہ زیادہ بم ...

مزید پڑھیں »