تبصرے

سوویت یونین کی جارحیت اور شکست استعمار کے لیے درس عبرت ہے

27/ دسمبر 1979ء کو(یعنی 36 سال پہلے) سوویت یونین کی  سرخ ریچھ نے افغان مقدس سرزمین پر جارحیت کی۔ اپنے غلاموں (خلق و پرچم) کے ذریعے افغانستان پر قبضہ کرلی۔ یہ منحوس سانحہ 27/اپریل 1978ء ثور کمیونسٹی کودتاہ کے  بیس ماہ بعد رونما ہوئی۔ غاصب افواج نے اپنے لے پالک غلام حفیظ اللہ امین کی حکومت کو نہایت وحشت سے ...

مزید پڑھیں »

اسلامی نظام کا قیام اور استعمار کا خاتمہ وطن عزیز کے استحکام کا طریقہ ہے

حالیہ دنوں میں وطن عزیز کا دارالحکومت کابل شہر  ایک قسم تحرکات کا شاہد تھا۔ بعض نہاد نام سابق مجاہدین اور اس سے پہلے کٹھ پتلی انتظامیہ کے بعض عہدیداروں نے حراست اور ثبات کے نام ایک کونسل کا اعلان کیا۔ افغانستان کے  استحکام کے لیے چند مطالبات پیش کیے۔ موصوف کونسل انتخاباتی نظام اور سیکورٹی کے شعبے میں اصلاحات ...

مزید پڑھیں »

دشمن سویلین کو کیوں نشانہ بنارہے ہیں ؟!!

جمعہ کے روز 04/دسمبر 2015ء صوبہ میدان ضلع سیدآباد کے شنیز کے علاقے اوتڑیو گاؤں میں کابل دوہری انتطامیہ سے منسلک وحشی بندوق برداروں نے  بچوں سمیت 18 نہتے افراد کو خون میں نہلادیے۔ رپورٹ کے مطابق یہ المناک سانحہ ایسے وقت میں رونما ہوا، جب معمول کے مطابق لوگ سردی کے موسم میں صبح کے وقت مسجد کے آس ...

مزید پڑھیں »

وطن عزیز میں ایک بارپھر روسی مصروفیت کسی کے مفاد میں نہیں ہے

حالیہ دنوں میں کابل کٹھ پتلی انتطامیہ نے ایسی کوششیں شروع کیں ہیں، کہ  افغانستان میں (داعش) کے بہانے روس کی طرح اہم ملک کو پھنسادے۔ وہ داعش کے نام سے ناجائزفائدہ اٹھاتے ہیں۔اس کے تعداد اور طاقت کو اندازے سے کئی گنا زیادہ بتاتے ہیں۔ خطے اور خاص کر ہمارے شمالی ہمسائیوں کے لیے اسے خطرہ سمجھتے ہیں۔ اسی ...

مزید پڑھیں »

عزم جہادی آپریشن کا جاری پیشرفت اور استعمار کے خدشات

امارت اسلامیہ کی حالیہ فتوحات اور عزم جہادی آپریشن کےجاری پیشرفت سے وطن عزیز کے دشمنوں کو خدشات کا سامنا ہوا ہے۔ان کا یہ خیال تھا کہ جمہوریت کےپرکشش پردوں کے پیچھے جارحیت اور غاصب چھپ جائینگے  اور افغانی ان کے وعدوں سے دھوکہ میں پڑجائینگے۔  لیکن ان کی یہ چالاکی بھی ناکام ہوئی، بلکہ ڈیموکریسی اب افغانوں کے درمیان ...

مزید پڑھیں »

امارت اسلامیہ عوامی محافظ فورس ہے

وطن عزیز میں رہنے والے برادر اقوام اورقبائل جنہوں نے  ہزاروں سال  آپس میں بھائیوں کی طرح محبت بھری زندگی گزاری ہے۔ انہیں اس حقیقت کا بخوبی علم ہے کہ امارت اسلامیہ کا  تاسیس ، جہاد اور جدوجہد کے مقاصد پاک ہیں۔ اسلامی نظام کے تحت خودمختاری، ملک کی آزادی، ترقی، عوام کا وحدت اور امن وامان امارت اسلامیہ کا ...

مزید پڑھیں »

استعمار اب تک فتنوں کو بھڑکا رہے ہیں ؟!!

امریکی جارحیت کے چودہ سالہ سیاہ ترین دور میں وطن عزیز  کو کافی نقصان پہنچا اور بہت سے مصائب جھیلے۔ اسلام اور انسان کے دشمنوں نے کسی ظلم سے دریغ نہیں کیا۔ ظاہری تباہی و بربادی ، قتل عام اور تشدد کیساتھ افغان عوام کے ذہنی، فکری اور ثقافتی سرمائے پر  بھی تجاوز کیا۔ افغان عوام کے ہزاروں سالہ وحدت ...

مزید پڑھیں »

امن کے متعلق کابل بکھری انتظامیہ کا واحد مؤقف نہیں ہے

حالیہ دنوں میں صلح کے متعلق کابل انتظامیہ آپس میں کئی حصوں میں تقسیم ہوچکی ہے۔ تقریبا روزانہ صلح کے بارے میں متضاد رپورٹیں شائع کرتی ہیں۔ صدارتی محل کے ایک کمرے سے صدا بلند ہوتی ہے: صلح کے لیے ہمارے دوازے کھلے ہیں۔ دوسرے کمرے سے سنائی جاتی ہے : صلح کے منصوبے میں بہت غلطیاں ہوئی ہیں اور ...

مزید پڑھیں »

امارت اسلامیہ خطے اور ہمسائیہ ممالک سے بہترین تعلقات چاہتے ہیں

حالیہ دنوں میں کابل انتظامیہ کے بے اختیار عہدیداروں نے اپنی مایوسی اور ناتوانی چھپانے کی خاطر امارت اسلامیہ کے بہادر مجاہدین کو جھوٹے تہمت اور الزام لگار ہے ہیں۔ مجاہدین کی کارنامے اور فداکاریوں کو اجنبیوں سے منسوب کرتے ہیں۔ ایک طر ف مجاہدین کی قوت اور بہادری کو ہمسائیہ ممالک کے لیے خطرہ سمجھتی ہے،جبکہ دوسری جانب مجاہدین ...

مزید پڑھیں »

امارت اسلامیہ  عوام کی جان، مال اور عزت کی تحفظ کی خاطر قربانی دے رہی ہے

بائیس سال قبل( 15 محرم الحرام 1415ھ) کو علماءکرام کے مشورہ اور حمایت سے امیرالمؤمنین ملا محمد عمر مجاہد رحمہ اللہ تعالی نےاس مقصد کے لیے اسلامی تحریک تاسیس فرمایا، کہ اس وقت ملوک الطوائفی،  بےپناہ بدعنوانیوں اور بے لگام بندوق برداروں کا روک تھام کرکے افغان معزز عوام کو ان کے شر، ظلم اور وحشت سے نجات دلائے۔اس کے ...

مزید پڑھیں »