قندوزکاروائی، کمانڈر سمیت 52 ہلاک  و زخمی، 11 ٹینک تباہ، تصاویر

منصوری آپریشن کے سلسلے میں امارت اسلامیہ کے مجاہدین نے  صوبہ قندوز کے صدرمقام اور ضلع خان آباد میں دشمن کے مراکز پر حملہ کیا۔

آمدہ رپورٹ کے مطابق گزشتہ چار روز سے مذکورہ علاقوں میں دشمن کے مراکز پر حملے جاری ہیں، اس سلسلے میں اتوار کے روز سہ پہر کے وقت مجاہدین نے قندوز شہر کے مشرقی دروازے کے مربوطہ چرخاب، حوض، باغ میری اور کٹہ خیل کے علاقوں اور اسی طرح ضلع خان آباد کے مربوطہ دکان آدم خان،  عکس داؤد، نوآباد اور چارسرے کے علاقوں  میں واقع دشمن کے مراکز اور چوکیوں پر وسیع حملہ کیا، جو اطلاع آنے تک جاری ہے، جس میں اب تک 11 ٹینک تباہ ہونے کے علاوہ معروف وحشی جنگجو کمانڈر نیازمحمد سمیت 52 فوجی، مقامی جنگجو اور پولیس اہلکار ہلاک و زخمی ،جبکہ 2 گرفتار ہوئے اور دوران کمانڈر نیاز کی چوکی بھی رات کے وقت فتح  ہوئی۔

ذرائع کے مطابق آپریشن کے دوران مجاہدین نے دو فوجی ٹینک اور کافی مقدار میں مختلف النوع ہلکے و بھاری ہتھیار مجاہدین نے غنیمت کرلی ہے۔

قابل یادآوری ہےکہ چارسرے کے علاقے میں واقع فوجی بیس شدید محاصرے اور حملوں کے زد میں ہے اور قندوز ،خان آباد شاہراہ مکمل طور پر مجاہدین کے کنٹرول میں ہے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*