تخار و غزنی، 16 چوکیاں فتح، 25 ہلاک و زخمی، غنائم

منصوری آپریشن کے سلسلے میں امارت اسلامیہ کے مجاہدین نے تخار اور غزنی صوبوں میں دشمن پر حملہ کیا۔

تفصیل کے مطابق پیر اور اتوار کی درمیانی شب رات گئے مجاہدین نے صوبہ تخار ضلع خواجہ غار کے پل مؤمن اور گورتپہ کے علاقوں میں دشمن کی چوکیوں پر ہلکے و بھاری ہتھیاروں سے وسیع حملہ کیا، جو صبح تک جاری رہا، جس کے نتیجے میں اللہ تعالی کی نصرت سے دس چوکیاں اور وسیع علاقے فتح ہونے کے علاوہ 4 جنگجو ہلاک جبکہ 3 زخمی اور دیگر فرار ہوئے اور مجاہدین نے کافی مقدار میں مختلف النوع اسلحہ و فوجی سازوسامان غنیمت کرلی۔

دوسری جانب پیر کےروز سہ پہر کے وقت ضلع دشت قلعہ کے علاقے مربوطہ علاقوں میں مجاہدین نے دشمن پر اسی نوعیت کا حملہ کیا، جو رات تک جاری رہا، جس کے نتیجے میں تین چوکیاں پانچ بڑے گاؤں (قریہ کہنہ کول، باغ زاغان، لایقہ، ساسق کول اور بادینگگ ) فتح ہنے کے علاوہ 3 جنگجو قتل، 2 زخمی جبکہ 2 گرفتار ہونے کے علاوہ 2  کلاشنکوفیں، ایک راکٹ لانچر اور دیگر فوجی سازوسامان مجاہدین نے غنیمت کرلی۔

رپورٹ کے مطابق پیر اور اتوار کی درمیانی شب صوبہ غزنی ضلع شلگر کے نانی کے علاقے میں واقع چوکیوں پر مجاہدین نے حملہ کیا، جس میں ایک چوکی فتح ہوئی اور وہاں تعینات 10 ہلکار ہلاک جبکہ دیگر زخمی اور فرار ہونے میں کامیاب ہوئے،ایک ٹینک تباہ اور مجاہدین نے ایک راکٹ لانچر، ایک مارٹرتوپ،ایک اینٹی ایئر کرافٹ گن، ایک امریکی ہیوی  مشین گن،5 کلاشنکوفیں اور دیگر فوجی سازوسامان غنیمت کرلی۔

الحمدللہ تمام کاروائیوں میں مجاہدین کا کسی قسم کا نقصان نہیں ہوا ہے۔

دریں اثناء رات کے وقت مجاہدین نے ضلع دہ یک کے شاہ گل خیل کے علاقے میں واقع پولیس چوکی پر لیزرگن سے حملہ کیا، جس میں دو اہلکار ہلاک جبکہ تیسرا زخمی ہوا۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*