بلخ و ننگرہار، وسیع علاقے فتح، کمانڈر سمیت 8 ہلاک و زخمی

منصوری آپریشن کے سلسلے میں امارت اسلامیہ کے مجاہدین نے بلخ اور ننگرہار صوبوں میں دشمن پر حملہ کیا۔

موصولہ رپورٹ کے مطابق سنیچر کےروز سہ پہر کے وقت صوبہ بلخ ضلع چاربولک کے قلعہ کے علاقے میں مجاہدین نے مقامی جنگجوؤں پر ہلکے و بھاری ہتھیاروں سے وسیع حملہ کیا،جس کے نتیجے میں اللہ تعالی کی نصرت سے پانچ بڑے دیہاتوں تیمورک علیا، تیمورک سلفا، کابلیان، قلعہ اور اکر قلعہ سے دشمن کا صفایا کروایا گیا اور اس دوران متعدد اہلکار ہلاک و زخمی ہوئیں اور ہلاک شدہ گان میں وحشی جنگجو کمانڈر  عظیم لنگ بھی شامل ہیں۔

صوبہ ننگرہار سے موصولہ رپورٹ کے مطابق سنیچر کےروز شام کے وقت ضلع مہمنددرہ کے گردی بازار کے علاقے میں مجاہدین کے حملے میں ایک جنگجو ہلاک جبکہ دو زخمی اور ان کی گاڑی تباہ ہوئی۔

اسی طرح دوپہر سے قبل ضلع پچیرآگام کے صبر کے علاقے میں حکمت عملی کے تحت ہونے والے دھماکہ سے دو جنگجو ہلاک جبکہ دو زخمی ہوئے ۔

دریں اثناء ضلع بٹی کوٹ کے باریکاب اور فارم چار کے علاقوں  میں مجاہدین نے سیکورٹی فورسز پر حملہ کیا، جو دیر تک جاری رہا،جس کے نتیجے میں دشمن نے جانی و مالی نقصانات اٹھاتے ہی فرار کی راہ اپنالی۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*