قندوز، فوجی بیس،16 چوکیاں فتح، 80 ہلاک،8 ٹینک، گاڑیاں غنائم

الخندق آپریشن کے سلسلے میں امارت اسلامیہ کے مجاہدین نے صوبہ قندوز ضلع دشت آرچی میں دشمن کے مرکز اور چوکیوں پر حملہ کیا۔

اطلاعات کے مطابق بدھ اور جمعرات کی درمیانی شب مجاہدین نے پل پل مؤمن کے علاقے میں واقع فوجی بیس اور چوکیوں پر ہلکے و بھاری ہتھیاروں سے وسی حملہ کیا،جو اطلاع آنے تک جاری ہے، جس میں اب تک اللہ تعالی کی نصرت سے مجاہدین نے ایک فوجی بیس، 11 چوکیاں پر قابض ہوئے اور اس وقت 65 اہلکار بیس اور 7 چوکیوں میں مارے جاچکے ہیں، جبکہ 9 زخمی ہوئے، اس کے علاوہ مجاہدین نے چار فوجی ٹینک، چار رینجر گاڑیاں  اور کافی مقدار میں مختلف النوع اسلحہ وغیرہ غنیمت کرلی۔

دریں اثناء پل سیف الدین، بہلول، کمال اور جمال نامی چوکیوں پر مجاہدین نے اسی نوعیت کا حملہ کیا، جس کے نتیجے میں پانچ چوکیاں فتح اور وہاں تعینات اہلکاروں  میں سے 7 ہلاک جبکہ 9 زخمی اور مجاہدین نے کافی مقدار میں ہلکے و بھاری ہتھیار قبضے میں لیے۔

دوسری جانب بدھ کے روز شام کے وقت قندوز شہر کے کٹہ خیل کے علاقے میں مجاہدین نے جنگجو کماندر نعیم عینک کو موت کے گھاٹ اتار دیا اور ان کے کلاشنکوف کو غنیمت کرلی۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*