ہلمند،مجاہدین اور رابط اہلکار کے حملے، 27 قتل، ٹینک و اسلحہ غنیمت

صوبہ ہلمند کے ناوہ ، سنگین اور نادعلی اضلاع میں امارت اسلامیہ کے مجاہدین اور رابط اہلکار نے سیکورٹی فورسز کی چوکیوں پر حملہ کیا،جبکہ ضلع گریشک میں تین اہلکار ٹینک وغیرہ سمیت مجاہدین سے آملے۔

اطلاعات کے مطابق بدھ اور جمعرات کی درمیانی شب ضلع ناوہ کے حاجی جنگ آغا کے علاقے میں واقع پولیس چوکی پر حملہ کرکے اللہ تعالی کی نصرت سے اس پر قابض ہوئے اور وہاں تعینات 16 اہلکار ہلاک جبکہ دیگر فرار ہوئے، اس کے علاوہ دو فوجی ٹینک اور ایک گاڑی بھی تباہ ہوئی اور مجاہدین نے 3 عدد امریکی گنیں، 2 کلاشنکوفیں، ایک راکٹ اور دیگر فوجی سازوسامان غنیمت کرلی۔

ذرائع کے مطابق دشمن کی جوابی فائرنگ سے 2 مجاہدین شہید جبکہ 3 زخمی ہوئے۔ تقبلہمااللہ تعالی

دوسری جانب مذکورہ ضلع تریخ زابر کے علاقے میں بدھ کے روز شام کے وقت مجاہدین کے رابط اہلکار نے چوکی میں تعینات جنگجوؤں کو نشانہ بنایا،جس کے نتیجے میں 4 شرپسند ہلاک اور رابط اہلکار ہیوی مشین گن کے ہمراہ مجاہدین تک پہنچنے میں کامیاب ہوا۔

رپورٹ کے مطابق  گریشک اور سنگین کے اضلاع کے درمیانی کمپرک کے مقام پر بدھ کے روز دوپہر کے وقت چوکی میں تعینات تین پولیس اہلکار سرنڈر ہوئے، جنہوں نے ایک فوجی ٹینک، چارکلاشنکوفیں، تین امریکی گنیں، ایک ہیوی مشین گن، ایک راکٹ، ایک مارٹرتوپ اور دیگر فوجی سازوسامان بھی مجاہدین کے حوالے کردیے۔

اسی طرح بدھ اورجمعرات کی درمیانی شب ضلع سنگین کے پان کیلی اور ضلع نادعلی کے نرئے ماندہ اور شاول کے علاقوں میں مجاہدین نے چوکیوں پر حملہ کیا،جس کے نتیجے میں سات اہلکار ہلاک اور ایک ٹینک بھی تباہ ہوا۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*